لاہور مہنگا , کراچی سستا ترین شہر , 200 ارب روپے سگریٹ نوشی پر خرچ : اسٹیٹ بینک


ملک کے پانچ بڑے شہروں میں کراچی سستا ترین جبکہ لاہور سب سے مہنگا شہر ہے ۔ سٹیٹ بینک آف پاکستان کی رپورٹ کے مطابق صارفین کیلئے قیمتوں کے حساس اشاریہ(سی پی آئی) کی روشنی میں اگست 2017 کے دوران سی پی آئی کی شرح کراچی میں 1.7 فیصد ریکارڈ کی گئی ہے جبکہ گزشتہ مالی سال کے اسی عرصہ کے دوران یہ شرح 3.3 فیصد تھی۔ رپورٹ کے مطابق ملک کے پانچ بڑے شہرں میں سی پی آئی کی مناسبت سے لاہور سب سے مہنگا شہر ہے جہاں اگست 2017 کے دوران سی پی آئی کی شرح 5.1 فیصد ریکارڈ کی گئی ہے جبکہ ملک کے دیگر بڑے شہروں میں صارفین کیلئے قیمتوں کے حساس اشاریہ میں ملا جلا رجحان ریکارڈ کیا گیا ہے ۔دریں اثنا سٹیٹ بینک کی رپورٹ میں بتایا گیا کہ پاکستان میں سگریٹ نوشی پرسالانہ 200 ارب روپے خرچ ہوتے ہیں، رپورٹ کے مطابق ملک میں اس وقت 40 فیصد مرد اور 9 فیصد خواتین سگریٹ نوشی کا شکار ہیں۔ اور اس تعداد میں مسلسل اضافہ ہورہا ہے ۔ ایشیا کے چار بڑے ممالک میں پاکستان پہلے نمبر پر ہے جہاں تمباکو کا استعمال سب سے زیادہ کیا جاتا ہے ۔ رپورٹ کے مطابق دیگر ممالک میں ملائشیا، انڈونیشیا اور ویتنام شامل ہیں۔ سگریٹ نوشی کے رجحان میں اضافہ کے باعث پاکستان میں ہر روز 1200 بچے سگریٹ نوش بن رہے ہیں جبکہ طلبا کی 15 فیصد تعداد سگریٹ نوشی کی عادی بن چکی ہے ۔ ماہرین صحت کا اس حوالے سے کہنا ہے کہ سگریٹ نوشی بہت سی موزی امراض کا سبب بن سکتی ہے اس لئے ضروری ہے کہ صحت مندانہ سرگرمیوں کے فروغ کے لئے جامع حکمت عملی کے تحت اقدامات کئے جائیں تا کہ نوجوان نسل کو سگریٹ نوشی کے مضر اثرات سے بچایا جا سکے ۔