سرسوں, کینولا اور رایا کی جڑی بوٹیوں کا تدارک


سرسوں اور رایا پاکستان کا اہم روائتی زرعی اجناس ہیں ہمارے ملک میں ان فصلات کی کاشت تمام تیلدار فصلوں میں زیادہ رقبہ پر کی جاتی ہے تا ہم اس فصل کی اوسط پیداور میں اضافہ وقت کی اہم ضرورت ہے تاکہ خوردنی تیل کی ملکی ضرورت پورے کر کے قیمتی زرمبادلہ بچا یا جاسکے۔اس فصل کی پیداوار میں کمی باعث بننے والے بہت سے عوامل میں سے ایک بڑے وجہ جڑی بوٹیوں کی موجودگی ہے۔ جڑی بوٹیاں ان پودوں کو کہتے ہیں جو کاشت شدہ فصل کے علاوہ اگتی ہیں اور ان کی موجودگی اصل فصل کے لیے نقصان دہ ثابت ہوتی ہے ۔ان جڑی بوٹیوں سے فصل کی نشونما پر برا اثر پڑتا ہے۔ سرسوں کی پیداوار میں کمی کا انحصار جڑی بوٹیوں کی موجودگی کی تعداد اور اقسام پر ہوتا ہے ،عام طور پر اس فصل میں دو قسم کی جڑی بوٹیاں پائی جاتی ہیں گھاس اور چوڑے پتوں والی جڑی بوٹیوں میں سینجی، پوبلی، پیازی ،شاہترہ، مینا،چھتری دودھک، بلی بوٹی للّی، رواڑی ، باتھو وغیرہ شامل ہیں۔

مکمل پڑھنے کے لئے براہِ مہربانی لاگن کریں

Register