دس 10 ماہ کے دوران سونے کی درآمد میں 90 فیصد کمی ریکارڈ


جولائی2014سے اپریل2015 کے دوران مجموعی طور پر ایک کروڑ78لاکھ26ہزار ڈالر مالیت کا441کلو گرام سونا درآمد کیا گیا
رواں مالی سال کے ابتدائی10ماہ کے دوران سونے کی درآمدات میں 90فیصد کمی ریکارڈ کی گئی ہے ، سونے کی درآمدات میں کمی کی بنیادی وجہ پاکستان میں قوت خرید کا کم ہونا بتایا جاتا ہے ۔وفاقی ادارہ برائے شماریات کے اعداد و شمار کے مطابق رواں مالی سال جولائی2014سے اپریل2015کے دوران مجموعی طور پر ایک کروڑ78لاکھ26ہزار ڈالر مالیت کا441کلو گرام سونا درآمد کیا گیا جبکہ گزشتہ برس اسی عرصے میں 17کروڑ30لاکھ43ہزار ڈالر مالیت سے 4ہزار179کلو گرام سونا درآمد کیا گیا تھا ۔اعداد و شمار کے مطابق ماہانہ بنیادوں پر سونے کی درآمدات میں 13فیصد اضافہ ہوا ہے ، اپریل2015میں45کلو گرام سونا درآمد کیا گیا جس کی مالیت17لاکھ80ہزار ڈالر بنتی ہے ، اس کے برعکس مارچ 2015 میں15لاکھ72ہزار ڈالرمالیت کا39کلوگرام سونا درآمد کیا گیا تھا ۔سونے کے درآمد کنندگان کے مطابق پاکستان میں خریداروں کی قوت خرید روز بروز کم ہوتی جا رہی ہے جس کی وجہ سے ڈیمانڈ مزید گھٹ گئی ہے ، دوسری جانب غیر ملکی کرنسی کی نسبت پاکستانی روپے کی شرح تبادلہ کم ہونے کو بھی سونے کی درآمدات میں کمی کی بڑی وجہ قرار دیا جا رہا ہے