گیس چوری روکنے کیلئے صنعتی ،تجارتی سیکٹر کی مانیٹرنگ شروع


دو صنعتوں کا معائنہ ،مزید کارروائی کیلئے ٹیم نے انتظامیہ کو رپورٹ پیش کردی

سوئی سدرن کمپنی نے گیس چوری روکنے کیلئے صنعتی ، سی این جی اور تجارتی سیکٹرکی تفصیلی مانیٹرنگ شروع کردی ہے ۔اس سلسلے میں ایس ایس جی سی کی جانب سے جوائنٹ لوڈ سروے کیلئے ایک ٹیم تشکیل دی گئی ہے جس نے دو صنعتوں میسرز حامد ٹیکسٹائل ملز اور میسرز حامد گارمنٹس کا معائنہ کیا اورمزید کارروائی کیلئے انتظامیہ کو ایک تفصیلی رپورٹ پیش کی ۔دوسری طرف ایس ایس جی سی کے کسٹمرریلیشنز ڈپارٹمنٹ کی ٹاسک فورس نے سند ھ کے مختلف علاقوں میں چھاپے مارے ۔شکارپور ، میہڑ ، رادھن ، قاضی احمد، جیکب آباد ، نو ا ب شاہ ، سکرنڈ اور کراچی غربی میں چھاپوں کی سیریز میں 60سے زائد غیر قانونی کلیمپس کو ہٹایا گیا جو کہ ملزمان نے ایس ایس جی سی کی مین پائپ لائن پنکچر کرکے لگائے ہوئے تھے ۔ ٹیم نے گیس کی فراہمی منقطع کردی ۔چھاپے کے دوران لوڈ کے مطابق جرمانہ عائد کیا گیا ۔مجرمان کیخلاف قانونی کارروائی کی جائیگی۔