پنجاب :لائیواسٹاک کی 42ہزار ایکڑ اراضی بے کار، کروڑوں کا نقصان


بیاسی 82ہزار ایکڑ اراضی میں 20ہزار زیر استعمال، 20ہزارمزاروں کو لیز پر دی گئی

لائیواسٹاک کی پنجاب بھر میں ملکیتی اربوں روپے مالیت کی تقریباً 42ہزار ایکٹر اراضی محکمانہ غفلت اور ناقص حکمت عملی کے باعث بے آ ب و گیاہ پڑی ہے ، یہ اراضی تھوڑی سی محنت اور ٹھوس منصوبہ بندی کے ذریعے کا م میں لا ئی جا سکتی ہے لیکن اعلیٰ افسروں کی من ما نیوں کے سبب اسے استعمال میں نہ لانے سے قومی خزانہ کو سالانہ کروڑوں کا نقصان ہو رہا ہے ۔تفصیلات کے مطابق محکمہ لا ئیواسٹاک کے پاس پنجاب بھر میں کل 82ہزار ایکڑ اراضی ہے ،جس میں تقریباً20ہزار ایکڑاراضی محکمہ کے استعمال میں ہے جبکہ تقریباً20 ہزار ایکڑ اراضی مختلف مزاروں کو لیز پر دی گئی ہے جہاں سے ریونیواکٹھاا کیا جا رہا ہے جبکہ تقریباً42ہزار ایکڑ اراضی کئی سالوں سے خالی ہے ،زیا دہ تر زمین بھکر اور دیگر شہروں میں موجود ہے ۔ذرا ئع کے مطابق پرا ئیوٹ سیکٹر سے لوگوں نے محکمہ لائیواسٹاک سے زمین لیز پر مانگی لیکن محکمہ لائیواسٹاک کے افسران کی سستی کے باعث یہ پیشکش سے استفادہ نہ کیا جاسکا۔