رمضان سے قبل ہی سبزیوں، گوشت اور پھلوں کی قیمتوں میں اضافہ


رمضان کی آمد سے قبل ہی مہنگائی کا جن بے قابو ہوگیا اور گراں فروشوں نے کمر کس لی ہے، شہر میں سرکاری نرخ کی کھلم کھلا خلاف ورزی جاری ہے، مرغی فروشوں نے سرکاری پرائس لسٹ غائب کردی، زندہ مرغی 194روپے کلو کی سرکاری قیمت کے بجائے 220روپے جب کہ مرغی کا گوشت 301 روپے کلو کی سرکاری قیمت کے بجائے 340 سے 350روپے کلو فروخت ہورہا ہے۔

دوسری جانب پھل فروشوں نے گراں فروشی کا سلسلہ رمضان سے قبل ہی شروع کردیا، 60 روپے درجن فروخت ہونے والے کیلے کی قیمت اب 80 روپے طلب کی جارہی ہے، کچھ بہتر شکل و صورت کا کیلا 100 روپے درجن فروخت ہورہا ہے، خربوزے جو کچھ روز قبل 100 روپے کا ڈھائی کلو فروخت ہوتا رہا، اب 60 روپے کلو فروخت ہورہا ہے، گرما 100 روپے کلو، چیکو 80 سے 100 روپے کلو فروخت ہورہے ہیں، تربوز 40 روپے کلو فروخت ہورہاہے، سبزی اور چکن کی طرح پھل کی سرکاری پرائس لسٹ بھی صرف سرکاری فائلوں تک ہی محدود ہے۔

کمشنر کراچی کی جانب سے روزانہ کی بنیاد پر ریٹ لسٹ تو جاری کردی جاتی ہے، لیکن ان پر علمدرآمد کروانے والا کوئی نہیں عوامی حلقوں کا خدشہ ہے کہ اگر منافع خوروں اور ذخیرہ اندوزوں کے خلاف فوری ایکشن نہ لیا گیا، تو رمضان تک اشیائے خورد و نوش کی قیمتوں میں مزید اضافہ کردیا جائے گا۔