لہسن کی نئی ورائٹی کاشت کیلئے منظور،26ٹن فی ہیکٹر پیداوار ممکن


زرعی تحقیقاتی کونسل لہسن کی نئی وارئٹی کے امکانات کا تعین کرنے کیلئے ورائٹی ایویلوایشن کمیٹی کا اجلاس ممبر پلانٹ سائنسز ڈاکٹر انجم علی کی زیر صدارت منعقد ہوا جس میں ملک بھر سے زرعی ماہرین نے بھرپور شرکت کی، چونکہ ملک میں لہسن کی مانگ زیادہ اور پیداوار کم ہے ، اس لیے پاکستان لہسن کی در آمد کیلئے قیمتی زر مبادلہ خرچ کرتا ہے ،پاکستان لہسن چائنا، انڈیا اور چلی سے در آمد کر رہا ہے ، حالیہ مانگ میں اضافے اور کم پیداوار ہونے کی وجہ سے لہسن کی پیداوار کا منصوبہ قومی زرعی تحقیقاتی مرکز، اسلام آباد میں شروع کیا گیا، نئی متعارف کی جانے والی ورائٹی نارک جی ون(NARC-G1) کو میٹنگ کے تمام ممبرز نے کاشت کیلئے منظور کیا۔