سندھ ،جعلی زرعی دواؤں اور کھادوں کی مارکیٹوں میں موجودگی بڑا المیہ


سیکریٹری زراعت و ڈویژنل کمشنر میرپورخاص شفیق احمد مہیسر نے کہا کہ سندھ میں پانی کی قلت کے ساتھ جعلی زرعی دواؤں اور کھادوں کی مارکیٹوں میں موجودگی بڑا المیہ ہے ، اس کی روک تھام کیلئے فوری عملدرآمد کرایا جائے ، ان خیالات کا اظہار ا نہوں نے کانفرنس ہال میرپورخاص میں ایک اہم اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا،اجلاس میں ڈائریکٹر جنرل ایکسٹینشن زراعت ہدایت اللہ چھچڑو، ڈی آئی جی پولیس ثاقب اسماعیل ، ایڈیشنل کمشنر میرپورخاص محمد حسین خاص خیلی، ڈپٹی کمشنر میرپورخاص شہریار گل میمن، اے ڈی سی عمر کوٹ اور میرپورخاص ڈویژن کے محکمہ زراعت کے افسران نے شرکت کی ،شفیق احمد مہیسر نے مزید کہا کہ زراعت کی توسیع کیلئے ہر ممکن کوششیں کی جائیں گی ، جعلی زرعی دواؤں اور کھادوں کے استعمال کے باعث بہت نقصان ہو رہا ہے ، جعلی دوائیں بنانے اور فروخت کرنیوالوں کے خلاف سخت قانونی کارروائی کی جائیگی۔