چینی کی عالمی پیداوار 18 کروڑ 50 لاکھ ٹن رہنے کی توقع


کھپت بھی ریکارڈ اضافے کے ساتھ 17 کروڑ 41 لاکھ ٹن تک پہنچنے کا امکان

امریکا نے کہا ہے کہ سیزن 2017-18 ء کے دوران چینی کی عالمی پیداوار اور کھپت ریکارڈ رہنے کا امکان ہے ۔محکمہ زراعت کی جانب سے جاری جائزہ رپورٹ کے مطابق سیزن 2017-18 ء کے دوران چینی کی عالمی پیداوار 18 کروڑ 50 لاکھ ٹن رہنے کی توقع ہے جو ایک ریکارڈ ہوگا جبکہ کھپت بھی ریکارڈ اضافے کے ساتھ 17 کروڑ 41 لاکھ ٹن تک پہنچنے کا امکان ہے ۔پیداوار میں اضافے کی وجہ برازیل میں گنے کی ریکارڈ پیداوار ہے جس نے 40.2 ملین ٹن گنا پیدا کیا جو سیزن 2016-17 ء کی نسبت 1.1 ملین ٹن زیادہ ہے ۔بھارت کی گنے کی پیداوار 27.7 ملین ٹن رہنے کی توقع ہے جو 2016-17 ء کی نسبت 25 فیصد زیادہ ہے ۔امریکا میں چینی کی پیداوار 8 ملین ٹن رہنے کی توقع ظاہر کی گئی ہے جو پچھلے سیزن کی مقدار 8.1 ملین ٹن سے کم ہے ۔اس سے اس کی چینی کی درآمد 14.3 فیصد بڑھ کر 3.4 ملین ٹن تک پہنچ جانے کا امکان ہے ۔ انڈونیشیا میں بھی چینی کی درآمد میں اضافے کا امکان ظاہر کیا گیا ہے جو چین کے بعد چینی کا سب سے بڑا درآمد کنندہ ہے ۔