پاک واٹر ایکسپو شروع، پہلے دن ایک کروڑ روپےکے سودے طے


تین روزہ پاک واٹر ایکسپو کا ایکسپو سینٹر کراچی میں آغازہوگیا ہے۔ وزیر بلدیات سندھ جام خان شورو نے ایکسپو کا افتتاح کیا۔ ایکسپو کے پہلے دن ایک کروڑ روپے کے سودے طے پا گئے۔ ایکسپو مین چین، تائیوان اور ترکی سے بھی کمپنیاں اور مندوبین شرکت کر رہے ہیں۔اس موقع پر ڈائریکٹر کے فور پروجیکٹ ڈاکٹر سلیم بھی موجود تھے۔ افتتاح کے بعد وزیر بلدیاتی سندھ نے نمائش میں اسٹالز پر موجود جدید مشینری دیکھی اور شرکاء  سے تبادلہ خیال کیا۔ دورے کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئےجام خان شورو نے کہا کہ منرل واٹرکے نام پر پانی بیچنے والی بہت سی کمپنیاں غیر رجسٹر ہیں۔ تمام کمپنیوں کےلئے ایس او پی بنا کر عملدرآمد کا پابند بنایا جائے۔ انہوں نے کہا کہ شہر میں پانی کی کمی کو دور کرنے کے لیے کھارے پانی کو میتھا بنانے کے منصوبوں پر جانا پڑےگا۔ ایم کیو ایم کے رہنما ڈاکٹر فاروق ستار کی کی جانب سے تعاون کی پیش کش سے متعلق سوال کے جواب میں جام خان شورو نی کہا کہ وہ پہلے ان سے شہر کی صفائی کے لئے جاری 100 روزہ مہم میں تعاون حاصل کریں گے۔ اس کے بعد پانی کی کمی کو دور کرنے کے لیے بھی مشترکہ حکمت عملی اپنائیں گے۔ اس دوران میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ڈائریکٹر پرائم ایونٹ مینجمنٹ کامران عباسی نے بتایا کہ یہ پاکستان میں اپنی نوعیت کا دوسترا ایکسپو ہے جو صرف۔ ایکسپو میں ملکی اور غیر ملکی 35 سے زاہد کمپیاں اپنی مصنوعات اور مشینری متعارف کرائیں گی۔